آئی بی ایس ایس ڈین پیش کرتے ہیں ٹی ای ڈی ایکس شوچو میں اعلیٰ تعلیم کی نئی حکمت عملیاں

شوچو، چین، 9 اپریل 2014ء/پی آرنیوزوائر/ — انٹرنیشنل بزنس اسکول شوچو (IBSS)  کی ڈین پروفیسر سارا ڈکسن نے شوچو میں منعقدہ حالیہ ٹی ای ڈی ایکس تقریب میں چین میں اعلیٰ تعلیم کے روایتی اداروں کی ‘موجودہ حالت’ کو چیلنج کیا۔

‘تخلیقی جست’ کے موضوع پر ہونے والی سال رواں کی تقریب میں مختلف ثقافتوں سے تعلق رکھنے والے نوجوان ماہرین پر مشتمل حاضرین کے سامنے 11 مقررین نے اپنے خیالات پیش کیے۔ ڈکسن نے اس موضوع پر عظیم تر تخلیق اور چین کے تعلیمی نظام میں لچک کی ضرورت کا بھی احاطہ کیا۔

ڈین ڈکسن نے تعلیمی اصلاح کی ضرورت کو تحریک دینے والے تین مسائل : عالمی معاشی تبدیلی، تباہ کن ٹیکنالوجیز اور نئے کاروباری نمونوں اور تحفظ پذیر ترقی، کے ساتھ ‘روایتی بمقابلہ اضافی جدت طرازی بمقابلہ انتشار انگیز جدت طرازی’ کی طرف ‘ہاپو ٹاپو، کودا کودی یا اونچی چھلانگ’ کا قیاس استعمال کرتے ہوئے تعلیم میں تخلیقی جست کا جائزہ لیا ۔

پروفیسر ڈکسن نے چینی تعلیمی عمل کے مسائل اور حلوں کا تعلیمی قوت تخلیق کی بنیاد پر جائزہ لیا جیسا کہ چین کے کالج میں داخلے کے امتحان “گاؤکاؤ”  کے کے اثرات، اور ساتھ ساتھ والدین کی نگرانی، ابتدائی تعلیم، انتظامی ذخائر، بنیادی ڈھانچہ اور سست کلیہ وجہ سے پڑنے والا دباؤ۔

“گاؤکاؤ میں کیا خامی ہے؟ یہ آپ کو سمجھاتا ہے کہ امتحان کیسے پاس کرنا ہے، اور یہ کہ صرف ایک درست جواب ہے۔” پروفیسر ڈکن نے کہا۔ ” حل کیا ہے؟ اس کی تدریس کہ ایک سے زیادہ صحیح جوابات نہیں۔” انہوں نے زوردیا کہ آئی بی ایس ایس میں طلباء کی حوصلہ افزائی کی جاتی ہے کہ وہ کاروباری چیلنجز کے لیے حلوں کی وسیع اقسام تیار کریں اور طلباء کے جذبات اور فکر میں سرایت  کرنے والی “دلچسپی کے ذریعے تدریس” کلید ہے: “اگر آپ تعلیم کو زیادہ دلچسپ بنائیں تو یہ طالب علم کے لیے زیادہ بامقصد بن جاتی ہے۔”

پروفیسر ڈکسن نے گفتگو کا اختتام کرتے ہوئے حاضرین پر زور دیا کہ وہ تخلیقی جست کے سلسلے کے چند قدم اٹھا کر “اپنے آرام کدوں سے نکلیں”: سکہ بند ذہن سے “ذہن کو آزادی دینے” کی طرف، موجودہ حالات کو قبول کرنے سے چیلنجز کو قبول کرنے کی جانب، جامد سے متحرک کی سمت، اور نقل سے حقیقی جدت طرازی کی جان بڑھیں۔

آئی بی ایس ایس کے بارے میں

سیان جیاؤتونگ-لیورپول یونیورسٹی (XJTLU) کا 2013ء میں قائم ہونے والا خصوصی بزنس اسکول آئی بی ایس ایس مغربی و چینی تعلیمی مشقوں کا انوکھا ملاپ پیش کرتا ہے۔ چین کے سب سے تیزی سے ابھرتے ہوئے اقتصادی مراکز میں سے ایک مشرقی گزرگاہ کے شہر شوچو میں واقع آئی بی ایس ایس کاروباری تعلیم و تحقیق میں بین الاقوامی رہنما بننے کا خواہاں ہے۔

سیان جیاؤتونگ-لیورپول یونیورسٹی ایک بین الاقوامی جامعہ ہے جو چین اور برطانیہ کے معروف تعلیمی ادروں کی جانب سے مشترکہ طور پر قائم کی گئی ہے۔ ایک آزاد چین-برطانوی منصوبے کی حیثیت سے ایکس جے ٹی ایل یو چین میں اعلیٰ تعلیم کے شعبے میں بانی کی حیثیت رکھتا ہے۔

مزید جانیے: xjtlu.edu.cn/en/

ہمیں فالو کیجیے:

facebook.com/xjtlu
weibo.com/xjtlu
twitter.com/xjtlu

ذریعہ: سیان جیاؤتونگ-لیورپول یونیورسٹی

Leave a Reply